free web stats
پہلہ صفحہ / بی بی سی اردو / سینیٹ انتخابات: کمزور امیدوار یا اپنے ہی اراکین پر عدم اعتماد، ایوان بالا کا الیکشن تحریک انصاف کے لیے خطرے کی گھنٹی کیوں؟

سینیٹ انتخابات: کمزور امیدوار یا اپنے ہی اراکین پر عدم اعتماد، ایوان بالا کا الیکشن تحریک انصاف کے لیے خطرے کی گھنٹی کیوں؟


  • محمود جان بابر
  • صحافی، پشاور

عمران خان

پیر کا دن ایسے دنوں میں سے تھا جیسے کسی خاص الیکشن کے موقع پر ہوتا ہے۔ پشاور میں وزیراعظم عمران خان کے سامنے خیبرپختونخوا سے منتخب اراکین قومی و صوبائی اسمبلی بیٹھے ہوئے تھے۔

وزیراعظم نے حسب معمول ان اراکین پارلمینٹ کے ساتھ سینیٹ کے تین مارچ کو ہونے والے انتخابات کے دوران شفافیت برقرار رکھنے اور الیکشن میں کرپشن کے خاتمے کے حوالے سے ایک جذباتی گفتگو کی۔

عمران خان کے سامنے بیٹھے اراکین اسمبلی نے ان کی باتوں کی تائید میں سر ہلانا شروع کیے تو وزیراعظم نے انھیں بتایا کہ سنہ 2018 کے سینیٹ انتخابات میں بھی ایسے ہی پارٹی کے اراکین اسمبلی نے سر ہلائے تھے لیکن جب الیکشن کے نتائج آئے تو ’جو لوگ بِکے تھے ان میں وہی سرہلانے والے سب سے زیادہ تھے۔‘

سنہ 2018 کے سینیٹ الیکشن کے بعد عمران خان نے صوبے میں اُس وقت کے وزیراعلیٰ پرویز خٹک کی سفارش پر ووٹ کے عوض مبینہ رشوت وصول کرنے والے اپنے بیس سے زائد اراکین صوبائی اسمبلی کو پارٹی سے نکال دیا تھا۔

خبرکا ذریعہ : بی بی سی اردو

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے